برکت اللہ بلوچ

مشکو مار پکنک پوائنٹ گوادر سے 35 کلومیٹر دور گوادر کے نواحی علاقہ پشکان میں واقع ہے۔ ساحل سمندر پر واقعہ اپنے قدرتی حسن لحاظ سے یہ ایک خوبصورت مقام ہے جہاں پکنک منانے والوں کا رش لگا رہتا ہے۔

 پکنک پوائنٹ پر تعمیر کئے گئے شیڈز پکنک منانے والوں کے لئے سائبان کا کام دیتے ہیں اور یہ شیڈز کسی سرکاری یا پرائیویٹ ادارے نے نہیں بلکہ پشکان کے مقامی نوجوانوں نے اپنی مدد آپ کے تحت تعمیر کیے ہیں۔

پانچ نوجوانوں پر مشتمل اس گروپ نے ”مشکو مار پبلک پارک ” کے نام سے ایک گروپ بھی بنایا ہے ۔ سماجی کارکن مقامی نوجوان محمد انور نے پاک وائسز سے بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ شیڈز کی تعمیر میں ایک مہینے کا عرصہ لگا ہے ابتداء میں اس مقام پر تین شیڈزتعمیر کئے گئے ہیں اور تینوں شیڈز ان کے گروپ کے ممبران نے پبلک فنڈ کے زریعے اپنی مدد آپ کے تحت تعمیر کئے ہیں۔

ان کامزید کہنا تھا کہ لوگوں کی دلچسپی اور رش کو دیکھ کر وہ اس مقام پر مزید تین شیڈز اور باتھ رومز تعمیر کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔ ان کے مطابق اس مقام کی خوبصورتی میں اضافہ کرنے کے لئے ناریل کے پلانٹ اور لائٹنگ  لگانے کا منصوبہ بھی زیرغور ہے۔

مشکو مار پکنک پوائنٹ پر صفائی کا خاص خیال رکھا جاتا ہے۔ پکنک پوائنٹ کی صفائی کا انتظام  رضاکار خود انجام دیتے ہیں اور اسکولوں کے طلباء بھی صفائی مہم میں حصہ لیتے ہیں۔

پشکان کے معروف سیاسی و سماجی شخصیت بابا آدم کے مطابق جس جگہ پر مشکو مارپکنک پوائنٹ واقع ہے ایک زمانے میں یہ مقام سمندر کا حصہ تھا اور یہاں پر مچھلی کی ایک قسم مشکو کی بہتات تھی جہاں ماہی گیر اس کا شکار کیا کرتے تھے اور اسی مناسبت سے اس کانام مشکو مار پڑگیا ہے۔

بابا آدم کے مطابق موسمی تغیرات کے باعث سمندر پیچھے چلاگیا ہے اور یہاں قدرتی زمین پیدا ہو گئی ہے جسے لوگوں نے پکنک پوائنٹ بنایا ہے۔یہ مقام ایک پکنک پوائنٹ کے علاوہ سمندری حیات کی افزائش نسل کے لئے بھی ایک بہترین مقام ہے جو کچھوؤں اور سمندری پرندوں کا مسکن ہے۔

LEAVE A REPLY