ساگر بلوچ

پسنی ساحلی علاقہ ہونے کی وجہ سے اسکے اکثر لوگ ماہیگیری کے پیشے سے منسلک ہے۔ ذرین سمندری کنارہ پسنی شہر سے7 کلو میٹر کے فاصلے پر جنوب مشرق میں واقع ہے۔ اس کنارے میں اب بھی لوگ اپنی چھوٹی چھوٹی کشتیوں کے ساتھ ماہیگیری کررہے ہیں۔

تقریبََا دو دہائی قبل حکومت بلوچستان نے سمندر  کے اس کنارے میں ماہیگیروں کی تکلیف کو سمجھتےہوئے یہاں ایک شیلٹر تعمیرکیا تھا لیکن چند برس کے بعد یہ شیلٹر گر گئی۔

ماہیگیر دلوش بلوچ نے پاک وائسز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گرمیوں کے موسم میں جھلسا دینے والی گرمی میں کام کرنا بہت تکلیف ہوتا ہے اور سر چھپانے کیلئے اور جالوں کو بنانے کیلئے کوئی سایہ نہ ہونے کی صورت میں ہم بہت پریشان ہے۔ اس نے مزید کہا کہ حکومت بلوچستان  سے درخواست کرتے ہیں کہ ہم ماہیگیروں کیلئے فوری طور پر ایک شیلٹر تعمیر کیا جائے تاکہ ہم سکون سےرہ سکے۔

LEAVE A REPLY